ادارہ ادبیات اردو، حیدرآباد

7498 کتاب

کتب خانہ: تعارف

ادارۂ ادبیات اردو کا قیام 1920ء میں ہوا تھا۔ یہ ادارہ حیدرآباد کے علاوہ سابقہ ریاست حیدرآباد کے دیگر اضلاع میں اردو زبان و ادب کے فروغ کا کام کرتا تھا اور اس کی ریاست کے اضلاع میں بھی شاخیں تھی۔ یہ ایک طرح کی ادبی تحریک تھی جس کے روح رواں اور بانی مشہور محقق ڈاکٹر محی الدین قادری زور تھے، اردو زبان و ادب کی توسیع اور حفاظت، اردو کو مختلف علوم و فنون سے روشناس کرانا، سرزمین دکن میں اردو زبان و ادب کا صحیح ذوق پیدا کرنا، تاریخ دکن کی خدمت اور ملک کے تاریخی اور ادبی آثار کی حفاظت اور تصنیف و تالیف میں رہبری اور مدد جیسے عوامل اس ادارہ کے مقاصد میں شامل تھے، جو اب تک بحسن خوبی انجام پائے۔ ادارہ ادبیات اردو آج کے دور میں بھی اپنی مطبوعات اور رسائل کے لیے شہرت رکھتا ہے۔ رسالہ "سب رس" اسی دارے کی دین ہے۔ اس کے علاوہ ادارہ ادبیات اردو کے امتحانات اردو ماہر، اردو عالم، اردو فاضل حیدرآباد و سکندرآباد، اضلاع و بیرون ریاست تلنگانہ کے تمام مراکز پر ایک ساتھ منعقد کرتے آ رہا ہے۔ یہ امتحانات دونوں ریاستوں تلنگانہ اور آندھرا پردیش کے مختلف تعلیمی اداروں میں کئی مساوی قابلیتوں کے برابر تصور کیے جاتے ہیں۔ اس دارے کی خدمات کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔ ادارہ ادبیات اردو، حیدرآباد کی اب بیشتر اردو کتابیں ریختہ ڈیجیٹل لائبریری کا حصہ ہیں، جن میں "آب حیات" از محمد حسین آزاد، "ابن بطوطہ کا سفر نامہ ہندوستان" از اقبال احمد، "ابن رشد" از محمد یونس انصاری، "ابتدائی اردو" کی تمام جلدیں از عبد الرحمن بارکر، "آئین قیصری" از محمد ذکاء اللہ، "ابوالکلام کے افسانے"، "آتش گل" از جگر مرادآبادی، "آثار الصنادید" از سرسید، "احسن التواریخ" از منشی رام سہائے تمنا، "اقبال کامل" از عبد السلام ندوی، "آخری تحفہ" از پریم چند، "اردو دب کی تاریخ" از نسیم قریشی، "اردو کی پہلی کتاب" تمام حصے از محمد حسین آزاد، "اردوئے معلی" از مرزا غالب، "اسباب بغاوت ہند" از سر سید، "افادات سلیم" از وحید الدین سلیم، جیسے اردو ادب کے شاہکار جبکہ رسائل میں "ادب لطیف، "ادبی دنیا، "اردو سائیکو لوجی، "ارم، "افادہ، حیدرآباد، "افکار، بھوپال، "البیان، امرتسر، وغیرہ جیسے  بیشتر شمارے یہاں  موجود ہیں، ادارہ ادبیات اردو، حیدرآباد کے ذخیرے سے آپ گھر بیٹھے استفادہ کرسکتے ہیں۔

مزید پڑھئے
ادارہ ادبیات اردو، حیدرآباد
باعتبار : عنوان
  • عنوان
  • سال
  • مصنف

سہیل، گیا

  

1942

سہیل، گیا

  

1942

سہیل، گیا

  

1941

سہیل، گیا

  

1940

سہیل، گیا

  

1941

سہیل، گیا

  

1942

سہیل، گیا

  

1941

سہیل، گیا

  

1942

سہیل، گیا

  

1940

سہیل، گیا

  

1942

سہیل، گیا

  

1940

سہراب ورستم

  

1955

سولہ سنگار

سدرشن

1938

سورج کی صلیب

  

1968

سوویت کمیونسٹ پارٹی کے پروگرام کے نئے ایڈیشن کے بارے میں

  

1986

سوویت کومسومول کے 70 سال

ولادیمیر ایگوروف

1988

سوویت قومیں اعداد وشمار

بورس شکوندن

1987

سوویت سفارت خانے میں

الگزینڈر کزناچیف

1967

سوویت یونین اور مشرق وسطیٰ کا سمجھوتہ

رابرٹ دیوید کوف

  

سوویت امن تحریک اور عوامی ڈپلومیسی

سرگئی خودیاکوف

1989

سوویت کمیونسٹ پارٹی کی ۲۷ویں کانگریس

  

1986

سوویت کمیونسٹ پارٹی کی کانگریسیں اور ہندوستان

پیارا سنگھ صحرائی

1986

سوویت جائزہ

  

1969

سویٹ روس

جواہر لعل نہرو

1940

سوویٹ روس کا نظام کار

مسٹر ایچ ۔ این ۔ بریلز فورڈ

1922

سوویت طلباء

کرو گلیا نسکی

1958

سوویت یونین 100 سوال 100 جواب

  

1987

سوویت حکومت کا طرز حکومت

واو کارپنسکی

1956

سوویت یونین کی کمیونسٹ پارٹی کی انیسویں کانفرنس

نامعلوم مصنف

1988

سویت یونین کی قومیں

ڈاکٹر ادھیکاری

  

سوویت یونین مشرق کی قوموں کا سچا دوست

نکیتا خروشچوف

1960

سوویت یونین میں تعلیم عامہ

ڈائنکو

1959

سوویت ازبکستان کی سیر

وکٹر ویتکووچ

1959

سویت یونین کی کمیونسٹ پارٹی کا پروگرام

  

1961

سوز نفس

مرزا حسن بیگ

1970

سوز نا تمام

عاشق حسین بٹالوی

1936

سوز قمر

ڈاکٹر قمرالدین قمر, انجم سوز

1986

سوز وطن

  

1964

سوزو ساز

محمودہ رضویہ

1942

اسپیچ

مہراج سرکشن پرشاد شاد

  

سری ایکناتھ

شیخ چاند

1753

سری رمن مہرشی

رائے شیو موہن لعل ماتھر

1986

سٹالن

اوسکر رے

1940

صبح دوپہر شام

ستیہ پال آنند

1959

صوبائی خود مختاری کی ابتدا

بشیشور پرساد

1979

صبح امید

مہاراج کشن پرشاد بہادر

  

صبح زنداں

حسن شہیر

1953

صوفیائے کرام اور قومی یکجہتی

نثار احمد فاروقی

1997

سہاگ

  

1945

سہاگ

  

1942

Go to: