اب بھلا چھوڑ کے گھر کیا کرتے

پروین شاکر

اب بھلا چھوڑ کے گھر کیا کرتے

پروین شاکر

MORE BYپروین شاکر

    اب بھلا چھوڑ کے گھر کیا کرتے

    شام کے وقت سفر کیا کرتے

    تیری مصروفیتیں جانتے ہیں

    اپنے آنے کی خبر کیا کرتے

    جب ستارے ہی نہیں مل پائے

    لے کے ہم شمس و قمر کیا کرتے

    وہ مسافر ہی کھلی دھوپ کا تھا

    سائے پھیلا کے شجر کیا کرتے

    خاک ہی اول و آخر ٹھہری

    کر کے ذرے کو گہر کیا کرتے

    رائے پہلے سے بنا لی تو نے

    دل میں اب ہم ترے گھر کیا کرتے

    عشق نے سارے سلیقے بخشے

    حسن سے کسب ہنر کیا کرتے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پروین شاکر

    پروین شاکر

    مأخذ :
    • کتاب : Mah-e-tamam (Pg. 24)
    • Author : Parveen Shakir
    • مطبع : Educational Publishing House (2008)
    • اشاعت : 2008

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY