بے دلی کیا یوں ہی دن گزر جائیں گے

جون ایلیا

بے دلی کیا یوں ہی دن گزر جائیں گے

جون ایلیا

MORE BY جون ایلیا

    بے دلی کیا یوں ہی دن گزر جائیں گے

    صرف زندہ رہے ہم تو مر جائیں گے

    رقص ہے رنگ پر رنگ ہم رقص ہیں

    سب بچھڑ جائیں گے سب بکھر جائیں گے

    یہ خراباتیان خرد باختہ

    صبح ہوتے ہی سب کام پر جائیں گے

    کتنی دل کش ہو تم کتنا دلجو ہوں میں

    کیا ستم ہے کہ ہم لوگ مر جائیں گے

    ہے غنیمت کہ اسرار ہستی سے ہم

    بے خبر آئے ہیں بے خبر جائیں گے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    جون ایلیا

    جون ایلیا

    مآخذ:

    • کتاب : gumaan (Pg. 113)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY