بلا رہا ہے مجھے آسماں تمہاری طرف

خلیل مامون

بلا رہا ہے مجھے آسماں تمہاری طرف

خلیل مامون

MORE BYخلیل مامون

    بلا رہا ہے مجھے آسماں تمہاری طرف

    جلا کے نکلا ہوں سب آشیاں تمہاری طرف

    میں جانتا ہوں کہ سارے جہاں ہیں ختم یہاں

    مجھے ملے گا نہ کوئی جہاں تمہاری طرف

    خموشیوں کا بس اک سلسلہ ہے دور تلک

    نہ کوئی لفظ نہ کوئی زباں تمہاری طرف

    ہر ایک جیتا ہے وسعت میں کائناتوں کے

    کوئی بناتا نہیں ہے مکاں تمہاری طرف

    مرے ہوؤں کو کوئی مارے کس طرح آخر

    نہ کوئی تیر نہ کوئی سناں تمہاری طرف

    نہ کوئی دریا نہ پربت نہ آشیاں نہ شجر

    زمیں ہے کوئی نہ ہی آسماں تمہاری طرف

    ظہور عشق کی دنیا کو چھوڑ آیا ہوں

    میں خود کو کرتا ہوں سب سے نہاں تمہاری طرف

    میں منزلوں سے بہت دور آ گیا مامونؔ

    سفر نے کھو دیے سارے نشاں تمہاری طرف

    مآخذ:

    • کتاب : Sanson Ke Paar (Pg. 320)
    • Author : Khalil Mamoon
    • مطبع : Educational Publishing House, Delhi (2015)
    • اشاعت : 2015

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY