گرتی ہے تو گر جائے یہ دیوار سکوں بھی

اشفاق حسین

گرتی ہے تو گر جائے یہ دیوار سکوں بھی

اشفاق حسین

MORE BYاشفاق حسین

    گرتی ہے تو گر جائے یہ دیوار سکوں بھی

    جینے کے لیے چاہیئے تھوڑا سا جنوں بھی

    یہ کیسی انا ہے مرے اندر کہ مسلسل

    دیکھوں اسے لیکن نظر انداز کروں بھی

    کھل کر تو وہ مجھ سے کبھی ملتا ہی نہیں ہے

    اور اس سے بچھڑ جانے کا امکان ہے یوں بھی

    ایسی بھی کوئی خاص تعلق کی فضا ہو

    محفل میں جب اس کی نہ رہوں اور رہوں بھی

    وہ راز جو بس اس کی نگاہوں نے پڑھا ہے

    جی چاہتا ہے میں اسے ہونٹوں سے کہوں بھی

    اس وقت کہیں جا کے غزل ہوگی مکمل

    آنکھوں سے ٹپک جائے جو اک قطرۂ خوں بھی

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    اشفاق حسین

    اشفاق حسین

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    اشفاق حسین

    اشفاق حسین,

    نعمان شوق

    گرتی ہے تو گر جائے یہ دیوار سکوں بھی نعمان شوق

    اشفاق حسین

    گرتی ہے تو گر جائے یہ دیوار سکوں بھی اشفاق حسین

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY