تیرے پیار میں رسوا ہو کر جائیں کہاں دیوانے لوگ

عبید اللہ علیم

تیرے پیار میں رسوا ہو کر جائیں کہاں دیوانے لوگ

عبید اللہ علیم

MORE BYعبید اللہ علیم

    تیرے پیار میں رسوا ہو کر جائیں کہاں دیوانے لوگ

    جانے کیا کیا پوچھ رہے ہیں یہ جانے پہچانے لوگ

    ہر لمحہ احساس کی صہبا روح میں ڈھلتی جاتی ہے

    زیست کا نشہ کچھ کم ہو تو ہو آئیں مے خانے لوگ

    جیسے تمہیں ہم نے چاہا ہے کون بھلا یوں چاہے گا

    مانا اور بہت آئیں گے تم سے پیار جتانے لوگ

    یوں گلیوں بازاروں میں آوارہ پھرتے رہتے ہیں

    جیسے اس دنیا میں سبھی آئے ہوں عمر گنوانے لوگ

    آگے پیچھے دائیں بائیں سائے سے لہراتے ہیں

    دنیا بھی تو دشت بلا ہے ہم ہی نہیں دیوانے لوگ

    کیسے دکھوں کے موسم آئے کیسی آگ لگی یارو

    اب صحراؤں سے لاتے ہیں پھولوں کے نذرانے لوگ

    کل ماتم بے قیمت ہوگا آج ان کی توقیر کرو

    دیکھو خون جگر سے کیا کیا لکھتے ہیں افسانے لوگ

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    عبید اللہ علیم

    عبید اللہ علیم

    نور جہاں

    نور جہاں

    مآخذ
    • کتاب : Chand Chehra Sitara Aankhen (Pg. 115)
    • کتاب : Chand Chehra Sitara Aankhen (Pg. 115)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY