aurat aur deegar afsane

Rasheed Jahan

Pakistan Cooperative Book Society Ltd, Karachi
1937 | More Info

About The Book

Description

رشید جہاں غیر روایتی خیالات کی حامل اہم افسانہ نگار اور ڈرامہ نویس۔ متنازعہ افسانوی مجموعہ ’انگارے‘ میں شامل مصنفہ۔ خواتین کے مسائل کو بے باک انداز میں بیان کرنے کے لیے جانی جاتی ہیں۔ رشید جہاں کی انقلاب پسند طبیعت نے بعد کی افسانہ نگار خواتین کو ایک نئی راہ دکھائی۔ وہ نئی راہ یہ تھی کہ سماج میں پھیلی برائیوں کو مٹانے، عدم مساوات کے خلاف آواز احتجاج بلند کرنے، متوسط اور ادنیٰ طبقہ کی زبوں حالی کو دور کرنے کے لئے مردوں کے ساتھ ساتھ ایک عورت کس طرح شریک کار بنے؟ ان کے تمام افسانوں میں یہ احساس ایک احتجاج بن کر سامنے آتا ہے۔ خاص طور پر ان کے وہ افساے جن میں انہوں نے عورت کی جہالت، پس ماندگی اور اس کے لئے مرد کے سخت گیر رویے کو موضوع بنایا ہے اور مردوں کے حاکمانہ تسلط اور وحشیانہ ہوس پرستی کے خلاف ڈٹ کر آواز اٹھائی ہے۔ زیر نظر کتاب میں سات افسانے الگ الگ انداز کے ہیں۔ پہلے افسانے کا عنوان "عورت" ڈرامائی طرز میں لکھا گیا ہے جبکہ اگلے افسانے " سودا" کی تمہید میں افسانوی انداز کا پورا رنگ بھرا ہوا ہے۔ ساتوں افسانے اپنے اندر حیات انسانی کے مختلف مسائل سمیٹے ہوئے ہیں، جن کو پڑھ کر رشید جہاں کے فن سے آشنائی ہوتی ہے۔

.....Read more

More From Author

See More

Popular And Trending Read

See More

EXPLORE BOOKS BY

Book Categories

Books on Poetry

Magazines

Index of Books

Index of Authors

University Urdu Syllabus