دیوان طباطبائی

نظم طبا طبائی

مکتبۂ ابراہیمیہ امداد باہمی، حیدرآباد
1933 | مزید
  • معاون

    دارالمصنفین شبلی اکیڈمی اعظم، گڑھ

  • موضوعات

    شاعری

  • صفحات

    354

مصنف: تعارف

نظم طبا طبائی

اردو ادب کے بہت ہی مشہور و معروف شاعر جناب نظم طباطبائ کی عظیم المرتبت اور قابل صد احترام شخصیت دنیائے ادب اور خاص کر اہل حیدرآباد کے لئے محتاج تعارف نہیں ہے۔ یہ وہ صاحب قلم ہیں جنہوں نے اردو کو نہایت متین اور عالمانہ گفتگو سے روشناس کرایا۔

نظم طباطبائ کے اجداد ایران سے ہندوستان آئے اور لکھنو میں آ کر آباد ہو گئے۔ ۱۸؍نومبر ١٨۵٣ء کو مہلّہ حیدر گنج قدیم لکھنؤ میں بروز جمعہ نظم طباطبائ پیدا ہوئے۔ ان کا اصل نام سید حیدر علی تھا۔ کبھی حیدر اور کبھی نظم تخلص کرتے تھے۔ فارسی اور عروض کی تعلیم انہوں نے میندولال زار سے حاصل کی۔ ١٨٦٨ء میں پندرہ برس کی عمر میں یہ اپنی والدہ کے ساتھ مٹیا برج (کلکتہ) چلے آئے۔ 1882 میں آپ کا تقرر مٹیا برج ، کلکتہ کے مدرسہ شاہ اودھ میں شہزادوں کی تعلیم پر ہوا۔ مولوی سید افضل حسین لکھنوی، چیف جسٹس حیدرآباد کی دعوت پر ١٨٨٧ء میں نظم صاحب حیدرآباد آ گئے۔ ۴؍فروری۱۸۹۱ء کو نظام کالج حیدرآباددکن میں پروفیسر کے عہدے پر فائز ہوئے۔ "شرح دیوان غالب‘‘ ان کی مشہور تصنیف ہے اور ان کا شعری مجموعہ ’’دیوان طباطبائی" ہے۔ 23 ؍مئی 1933 کو حیدر آباد، دکن میں انتقال کرگئے۔


.....مزید پڑھئے

مصنف کی مزید کتابیں

مزید

مقبول و معروف

مزید

کتابوں کی تلاش بہ اعتبار

کتابیں : بہ اعتبار موضوع

شاعری کی کتابیں

رسالے

کتاب فہرست

مصنفین کی فہرست

یونیورسٹی اردو نصاب