ganjaha-e-granmaya

रशीद अहमद सिद्दीक़ी

मकतबा जामिया लिमिटेड, दिल्ली
1987 | अन्य
  • सहयोगी

    जामिया हमदर्द, देहली

  • श्रेणियाँ

    हास्य-व्यंग, स्केच / ख़ाका

  • पृष्ठ

    286

पुस्तक: परिचय

परिचय

اردو خاکہ نگاری کی تاریخ میں رشید احمد صدیقی کا نام سب سے اہم ہے۔ ظرافت کےعلاوہ انہوں نے اس نثری صنف کو بطور خاص اپنایا رشید احمد صدیقی ایک ممتاز خاکہ نگار ہیں۔ وہ اپنے خاکوں کو اپنے اسلوب کے رچاؤ سے نہ صرف محسوس بنادیتے ہیں بلکہ ان خصوصیات نے ان کے خاکوں میں شخصیات کو اور پروقاربنا دیا ہے۔ ان کے خاکے، خاکے نہیں، قلم کے اسکرین بن جاتے ہیں، جہاں اپنے حقیقی خدوخال میں ابھر آتے ہیں اور سارے واقعات ہماری آنکھوں دیکھا حال بن جاتے ہیں۔ اردو کے کسی بھی ادیب کو خاکہ نگاری میں اتنی کامیابی حاصل نہ ہوسکی جتنی رشید احمد صدیقی کوحاصل ہوئی۔خاکہ نگار کے حوالے سے رشید احمد صدیقی بلاشبہ منفرد حیثیت کے حامل ہیں، اور عظیم المرتبت مقام کے مستحق ہیں۔ خاکوں پر مشتمل ان کی یہ کتاب ’’ گنجہائے گرانمایہ‘‘نہ صرف علی گڑھ کے ماحول بلکہ اس کی شخصیات کا بہترین مرقع ہے،بقول سید عبد اللہ ،گنج ہائے گراں مایہ ، میں جو تصویریں ہیں وہ اتنی روشن ، واضح ، پُر اثر اور دلکش ہیں،کہ ان سے ہمارے ادب میں ایک قابل قدر اضافہ ہوتا ہے، رشید احمد صدیقی نے اپنے انہی نظریات کے باعث جن شخصیات کے خاکے تحریر کئے ہیں، ان میں شخصیات کے مقام اور مرتبہ سے متاثر ہوئے بغیر صرف اپنی ذاتی وابستگی اور تعلقات کو پیش نظر رکھا ہے۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

पूरा देखिए

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम