مجنوں کی ڈائری

قاضی عبدالغفار

اردو اکیڈمی، لاہور
1943 | مزید

مصنف: تعارف

قاضی عبدالغفار

قاضی عبدالغفار

’’لیلی کے خطوط‘‘ اور ’’مجنوں کی ڈائری‘‘ کے مصنف قاضی عبدالغفار اصلاً صحافی تھے۔ ان کے زورقلم نے کئی اخباروں کو وقار عطا کیا۔ ان کا وطن مرادآباد تھا۔ وہیں ابتدائی تعلیم ہوئی۔ اعلیٰ تعلیم کے لیے علی گڑھ آئے۔ ادبی اور سیاسی شعور اسی درسگاہ میں پروان چڑھا۔ عملی زندگی کا آغاز صحافت سے کیا۔ پہلے مولانا محمد علی کے مددگار کی حیثیت سے ’’ہمدرد‘‘(دہلی) سے وابستہ ہوئے۔ کچھ دنوں بعد دہلی سے کلکتہ چلے گئے اور وہاں سے روزنامہ ’’جمہور‘‘ جاری کیا۔ پھر حیدرآباد جاکر ’’پیغام‘‘ نکالا۔

صحافت کے علاوہ سوانح اور تاریخ سے بھی انہیں گہرا شغف تھا۔ آثار جمال الدین، حیات اجمل، یادگار ابوالکلام آزاد ان کے قلم سے نکلی ہوئی مشہور سوانح عمریاں ہیں۔ ان کی عمر کے آخری ایام انجمن ترقی اردو (ہند) کی خدمت میں گزرے۔ کافی عرصے تک انجمن کے سکریٹری کی خدمت انجام دی۔ اس دوران وہ انجمن کے ترجمان ’’ہماری زبان‘‘ کے مدیر بھی رہے۔

اپنی ذات زندگی میں بھی اور تصنیفی کاموں میں بھی قاضی صاحب کے یہاں بہت نفاست پائی جاتی تھی۔ لباس، خوراک، رہن سہن ہر معاملے میں وہ بہت خوش سلیقہ تھے۔ اسی طرح تحریر میں بھی نفاست کا ثبوت دیتے ہیں اور بہت سوچ سمجھ کر ایک ایک لفظ کا انتخاب کرتے ہیں۔ ان کی عبارت بہت ستھری اور پاکیزہ ہوتی ہے۔ قاضی صاحب کی نثر نگاری کی ایک خصوصیت ہے۔ منتخب اشعار کا استعمال ان کے یہاں بہت ملتا ہے۔ اکثر مضامین کی ابتدا وہ کسی شعر سے کرتے ہیں۔ اور بالعموم خاتمہ بھی شعر پر ہی ہوتا ہے۔

.....مزید پڑھئے

مصنف کی مزید کتابیں

مزید

مقبول و معروف

مزید

کتابوں کی تلاش بہ اعتبار

کتابیں : بہ اعتبار موضوع

شاعری کی کتابیں

رسالے

کتاب فہرست

مصنفین کی فہرست

یونیورسٹی اردو نصاب