مولوی نذیر احمد کی کہانی کچھ ان کی کچھ میری زبانی

مرزا فرحت اللہ بیگ

ایجوکیشنل بک ہاؤس، علی گڑھ
1955 | مزید
  • معاون

    انجمن ترقی اردو (ہند)، دہلی

  • موضوعات

    طنز ومزاح, نصابی کتاب, خاکے/ قلمی چہرے

  • صفحات

    89

کتاب: تعارف

تعارف

ڈاکٹر نذیر احمد،فرحت اللہ بیگ کے استاد تھے۔ یہ خاکہ مولوی عبد الحق صاحب کے اصرار پر ۱۹۲۷ میں لکھا گیا تھا۔تنقید نگاروں نے اسے اردو کا پہلا مکمل خاکہ کہا ہے۔اس خاکے میں فرحت اللہ بیگ کی کردار نگاری،مرقع نگاری اور ظرافت اپنے عروج پر ہے۔اس کتاب کی اہمیت اس لیے بھی ہے کہ ڈاکٹر نذیر احمد پر یہ خاکہ فرحت اللہ بیگ کی چشم دید اوربراہِ راست معلومات پر مبنی ہے،اور اس کے ذریعے زمانے کے احوال اورزبان کا پتا چلتا ہے۔ اس خاکہ میں فرحت اللہ بیگ نے نذیراحمد کی دلچسپ شخصیت کا اس طرح نقشہ کھینچا ہے کہ ممدوح کا حلیہ،چال ڈھال،کراروگفتار،کھاناپینا،بات چیت،نشست و برخاست،علم سے وابستگی،ان کےکاروبارغرض ان کی ہر ادا، ہر حرکت لفظوں میں سمودی۔اس خاکے کے مطالعےسےڈپٹی نذیراحمدخود چلتے پھرتےنظرآتےہیں۔خاکےکااسلوب مزاحیہ ہے۔بامحاورہ زبان،نپےتلے جملے، ضرب الامثال کےساتھ ظرافت کی آمیزش،کہاوتوں کے برمحل استعمال نے اس خاکےکومزیدتابناک کیا ہے۔

.....مزید پڑھئے

مصنف کی مزید کتابیں

مزید

مقبول و معروف

مزید

کتابوں کی تلاش بہ اعتبار

کتابیں : بہ اعتبار موضوع

شاعری کی کتابیں

رسالے

کتاب فہرست

مصنفین کی فہرست

یونیورسٹی اردو نصاب