tuloo-e-sahar

Kunwar Mahendra Singh Bedi Sahar

New Taj Office, Delhi
1962 | More Info

About The Book

Description

کنور مہند رسنگھ بیدی ہندوستانی شاعر تھے اور سحر تخلص کرتے تھے۔کنور مہندر سنگھ بیدی سحر ؔکی شاعری کا مطالعہ اُن کے نشاطیہ انداز ِفکر کی تائید کرتا ہے ،قنوطیت اور مایوسیوں سے ان کی حیات کو کوئی واسطہ نہیں رہا۔وہ اپنی حاضر جوابی اور اعلیٰ ظرافت کے لئے آج بھی یاد کئے جاتے ہے ،پندره سال کی عمر سے شعرکہنا شروع کر دیا تھا .اردو اکادمی دہلی سے اس کے قیام کے زمانے ہی سے منسلک رہے اور اس کے وائس چیئرمین بھی رہے۔انھوں نے لافانی اشعار حضور پاک صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی شان میں بھی کہے۔ سحرؔ ایک ہر دل عزیز شاعر ہونے کے ساتھ ساتھ ایک خوش اخلاق شخصیت کے مالک بھی تھے۔خوش مزاجی اور طنزو ظرافت ان کی شخصیت میں کوٹ کوٹ کر بھری ہوئی تھی۔وہ ہر محفل کو قہقہہ زار بنانے کابہترین ہنر جانتے تھے۔ ہر طرح کی مجلس میں لوگوں کومتاثر کرنے کی صلاحیت رکھتے تھے۔ زیر نظر کتاب ان کاپہلا شعری مجموعہ ہے جو کہ 1960 ء میں منطر عام پر آیا۔

.....Read more

About The Author

Kunwar Mahendra Singh Bedi Sahar

Kunwar Mahendra Singh Bedi Sahar

Kunwar Mahendra Singh Bedi was a famous Urdu shayar, who was born in 1909 in Sahiwal, Punjab (now in Pakistan). After partition, his family shifted to Fazilka, in India. Sahar's first book of Urdu poetry was "Tulu-e-Saḥar", which he had written in 1962. In 1983, he published a collection of autobiographical poetry titled "Yadon ka Jashn". An award was created to honor him. This award was known as the Kunwar Mahendra Singh Bedi Award. It was presented by Haryana Urdu Akademi.

.....Read more

More From Author

See More

Popular And Trending Read

See More

EXPLORE BOOKS BY

Book Categories

Books on Poetry

Magazines

Index of Books

Index of Authors

University Urdu Syllabus