urdu adab ki mukhtasar tareekh

अनवर सदीद

जमील जालिबी
1991 | अन्य
  • सहयोगी

    मज़हर इमाम

  • श्रेणियाँ

    भाषा एवं साहित्य

  • पृष्ठ

    721

पुस्तक: परिचय

परिचय

اس مختصر تاریخ میں سب سے پہلے ارود کی ابتدا ، پس منظر ، سیاسی سماجی ، معاشرتی پس منظر، اردو کی ابتدا، نظریات،اردو کے مختلف نام و رسم الخط، اصناف سخن کا مختصر تعارف پہلے باب میں بیان کیا گیا ہے۔ دوسرا باب اردو کی ابتدائی نشو ونما میں صوفیہ و بھکتوں کا حصہ اور اس میں صوفیہ حضرات اور بڑے بڑے بھکتوں کے بارے میں مخٹصر اطلاعات بیان کی گئی ہیں۔ تیسرا باب شمالی ہند میں اردو کا فروغ ااور چوتھا باب جنوبی ہند میں اردو کی نشو نما پھر بیجاپور ، گولکنڈہ ریاستوں کے بارے میں لکھا گیا ہے۔ اس کے بعد دکن میں اردو نثر، ولی کا عہد پر لکھا گیا ۔ پانچواں باب شمالی ہند میں اردو ادب کی صبح صادق، چھٹا باب نیا مرکز لکھنو میں اردو کے فروغ کو بتایا گیا ہے۔ آٹھواں باب اردو نثر کے دو ادوار، دلی کالج اور مشتشرقین کی دلچسپی۔ اسی طرح سے پوری کتاب ہر ہر جیز کو الگ الگ بیان کرتی ہے اور نہ بہت زیادہ اختصار کو روا رکھا گیا ہے اور نہ ہی طوالت کو جگہ دی گئی ہے۔ اس لئے اردو ادب کی تاریخ کے مطالعہ کے شائقین کے لئے یہ ایک بہترین کتاب ہے جسے ہر ایک کو اپنے مطالعہ میں رکھنا چاہئے۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

पूरा देखिए

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम