مصنف : گوپی چند نارنگ

ناشر : ڈائرکٹر قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان، نئی دہلی

سن اشاعت : 2002

زبان : Urdu

موضوعات : تحقیق و تنقید

ذیلی زمرہ جات : غزل

صفحات : 455

معاون : گوپی چند نارنگ

اردو غزل اور ہندوستانی ذہن و تہذیب

کتاب: تعارف

گوپی چند نارنگ کی اہم کتاب"اردو غزل اور ہندوستانی ذہن و تہذیب" کا دائرۂ فکر بے حد وسیع ہے۔ اس میں قدیم ہندوستانی تہذیب اور اسلامی تہذیب کے علاوہ مشترک ہندوستانی تہذیب میں کارفرما اور عمل آور کئی صیغہ ہائے فکر اور مختلفُ المآخذ عناصر ترکیبی پر بڑی دقّتِ نظر کے ساتھ توجہ کی گئی ہے۔ بعد ازاں اردو غزل کے جمالیاتی، نظریاتی اور فنی پہلوؤں پر بعض توجیہات کا بھی بڑی کاوش سے اطلاق کیا گیا ہے۔ گویا غزل کی صنف کا بظاہر راسخ مگر بباطن لچیلا کردار کثرت ہی کو وحدت میں نہیں ضم کرتا بلکہ تجزیے کے منتشر اجزا کی شیرازہ بندی بھی کر دیتا ہے اور یہ وہ خوبی ہے جس سے غزل کا ہر شعر متصف ہوتا ہے۔اس کتاب میں انھوں نے اس بات کو مدلل انداز میں ثابت کیا ہے کہ اردو غزل کی جڑیں کس طرح دور دور تک ہندوستانی تہذیب میں پیوست ہیں ، اردو غزل کس طرح مشترکہ ہندوستانی تہذٰب کی علبردار ہے۔ کس طرح ہندوستانی تہذیب کی نمائندہ ہے، کس طرح وہ ان دنوں تہذیبوں کے ملن سے وجود میں ، اس کتاب میں ہندوستانی غزل کی روح کو انھوں نے مکمل طور پر اس طرح سمو دیا ہے جس سے ہندوستانی غزل پوری آب وتاب کے ساتھ اردو شعرو ادب کی مرکزی صنف کے طور پر سامنے آئی ہے ۔

.....مزید پڑھئے

مصنف: تعارف

گوپی چند نارنگ اردو کے ایک بڑے نقاد، تھیوریسٹ اور ماہر لسانیات ہیں۔ ایک ادیب، نقاد، اسکالر اور پروفیسر کے طور پر انہیں ہندوستان اور پاکستان دونوں ملکوں میں ایک جیسی مقبولیت حاصل ہے۔  گوپی چند نارنگ کے نام یہ انوکھا ریکارڈ ہے کہ انہیں حکومت پاکستان کی طرف سے ممتاز ستارہ امتیاز (اعلیٰ کارکردگی) اور حکومت ہند کی طرف سے پدم بھوشن اور پدم شری سے نوازا گیا ہے۔
ان کے کاموں کے لیے انہیں اور بھی کئی اعزازات سے نوازا گیا ہے۔  جن میں  اٹلی کا مزینی گولڈ میڈل، شکاگو کا امیر خسرو ایوارڈ، غالب ایوارڈ، کینیڈین اکیڈمی آف اردو لینگویج اینڈ لٹریچر ایوارڈ، اور یورپی اردو رائٹرز سوسائٹی ایوارڈ شامل ہیں۔ ساہتیہ اکادمی نے انہیں 2009 میں اپنی باوقار فیلوشپ سے بھی نوازا تھا۔
 نارنگ نے ہندی اور انگریزی دونوں زبانوں میں کتابیں تصنیف کی ہیں۔ ان کا شمار اردو کے مضبوط حامیوں میں کیا جاتا ہے۔ وہ اس حقیقت پر افسوس کرتے ہیں کہ اردو زبان سیاست کاری کا شکار رہی ہے۔ ان کا ماننا ہے کہ اردو کی جڑیں ہندوستان میں ہیں اور  ہندی دراصل اردو زبان کی بہن ہے۔

.....مزید پڑھئے

مصنف کی مزید کتابیں

مصنف کی دیگر کتابیں یہاں پڑھئے۔

مزید

قارئین کی پسند

اگر آپ دوسرے قارئین کی دلچسپیوں میں تجسس رکھتے ہیں، تو ریختہ کے قارئین کی پسندیدہ

مزید

مقبول و معروف

مقبول و معروف اور مروج کتابیں یہاں تلاش کریں

مزید
بولیے