آپ کو چہرے سے بھی بیمار ہونا چاہئے

منور رانا

آپ کو چہرے سے بھی بیمار ہونا چاہئے

منور رانا

MORE BY منور رانا

    آپ کو چہرے سے بھی بیمار ہونا چاہئے

    عشق ہے تو عشق کا اظہار ہونا چاہئے

    آپ دریا ہیں تو پھر اس وقت ہم خطرے میں ہیں

    آپ کشتی ہیں تو ہم کو پار ہونا چاہئے

    ایرے غیرے لوگ بھی پڑھنے لگے ہیں ان دنوں

    آپ کو عورت نہیں اخبار ہونا چاہئے

    زندگی تو کب تلک در در پھرائے گی ہمیں

    ٹوٹا پھوٹا ہی سہی گھر بار ہونا چاہئے

    اپنی یادوں سے کہو اک دن کی چھٹی دے مجھے

    عشق کے حصے میں بھی اتوار ہونا چاہئے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites