آپ نے قدر کچھ نہ کی دل کی

حسرتؔ موہانی

آپ نے قدر کچھ نہ کی دل کی

حسرتؔ موہانی

MORE BY حسرتؔ موہانی

    آپ نے قدر کچھ نہ کی دل کی

    اڑ گئی مفت میں ہنسی دل کی

    خو ہے از بس کہ عاشقی دل کی

    غم سے وابستہ ہے خوشی دل کی

    یاد ہر حال میں رہے وہ مجھے

    الغرض بات رہ گئی دل کی

    مل چکی ہم کو ان سے داد وفا

    جو نہیں جانتے لگی دل کی

    چین سے محو خواب ناز میں وہ

    بیکلی ہم نے دیکھ لی دل کی

    ہمہ تن صرف ہوشیارئ عشق

    کچھ عجب شے ہے بے خودی دل کی

    ان سے کچھ تو ملا وہ غم ہی سہی

    آبرو کچھ تو رہ گئی دل کی

    مر مٹے ہم نہ ہو سکی پوری

    آرزو تم سے ایک بھی دل کی

    وہ جو بگڑے رقیب سے حسرتؔ

    اور بھی بات بن گئی دل کی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    آپ نے قدر کچھ نہ کی دل کی نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites