ہو گئی عقدہ کشائی ترے دیوانے سے

سید مبین علوی خیرآبادی

ہو گئی عقدہ کشائی ترے دیوانے سے

سید مبین علوی خیرآبادی

MORE BYسید مبین علوی خیرآبادی

    ہو گئی عقدہ کشائی ترے دیوانے سے

    راز کونین کھلے عشق کے افسانے سے

    ہو گئی عشق مجازی سے حقیقت کی نمود

    راہ کعبے کی نظر آئی ہے بت خانے سے

    قطرے قطرے کا مجھے دینا ہے محشر میں حساب

    مے چھلک جائے نہ ساقی کہیں پیمانے سے

    جانے کتنے دل مشتاق لیے ہے ارماں

    کاش شب ٹھہر بھی جائے ترے آ جانے سے

    ساتھ لاؤں گا مبینؔ اپنے بہاروں کا ہجوم

    لوٹ کر آؤں گا میں جب کبھی ویرانے سے

    مأخذ :
    • کتاب : Pirahn-e-harf (Pg. 22)
    • Author : Mubeen Alvi Khairabadi
    • مطبع : Mubeen Alvi Khairabadi (1999)
    • اشاعت : 1999

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے