منزل پہ نہ پہنچے اسے رستہ نہیں کہتے

نواز دیوبندی

منزل پہ نہ پہنچے اسے رستہ نہیں کہتے

نواز دیوبندی

MORE BYنواز دیوبندی

    منزل پہ نہ پہنچے اسے رستہ نہیں کہتے

    دو چار قدم چلنے کو چلنا نہیں کہتے

    اک ہم ہیں کہ غیروں کو بھی کہہ دیتے ہیں اپنا

    اک تم ہو کہ اپنوں کو بھی اپنا نہیں کہتے

    کم ہمتی خطرہ ہے سمندر کے سفر میں

    طوفان کو ہم دوستو خطرہ نہیں کہتے

    بن جائے اگر بات تو سب کہتے ہیں کیا کیا

    اور بات بگڑ جائے تو کیا کیا نہیں کہتے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY