رنگ چہرے پہ گھلا ہو جیسے

نور جہاں ثروت

رنگ چہرے پہ گھلا ہو جیسے

نور جہاں ثروت

MORE BYنور جہاں ثروت

    رنگ چہرے پہ گھلا ہو جیسے

    آئینہ دیکھ رہا ہو جیسے

    یاد ہے اس سے بچھڑنے کا سماں

    شاخ سے پھول جدا ہو جیسے

    ہر قدم سہتے ہیں لمحوں کا عذاب

    زندگی کوئی خطا ہو جیسے

    یوں جگا دیتی ہے دل کی دھڑکن

    اس کے قدموں کی صدا ہو جیسے

    زندگی یوں ہے گریزاں ثروتؔ

    ہم نے کچھ مانگ لیا ہو جیسے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY