رنج کی خوگر طبیعت ہو گئی

راجندر ناتھ رہبر

رنج کی خوگر طبیعت ہو گئی

راجندر ناتھ رہبر

MORE BYراجندر ناتھ رہبر

    رنج کی خوگر طبیعت ہو گئی

    لیجئے جینے کی صورت ہو گئی

    آپ ناحق ہو رہے ہیں شرمسار

    میری جو ہونی تھی حالت ہو گئی

    ہو گئے دیوانے ہم اچھا ہوا

    روز کے جھگڑوں سے فرصت ہو گئی

    ایک کانٹا سا کھٹکتا ہے مدام

    دل کی دشمن دل کی حسرت ہو گئی

    مے کشی کی کیا کہوں رہبرؔ کہ یہ

    ہوتے ہوتے میری عادت ہو گئی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY