شام کٹھن ہے رات کڑی ہے

راجندر ناتھ رہبر

شام کٹھن ہے رات کڑی ہے

راجندر ناتھ رہبر

MORE BYراجندر ناتھ رہبر

    شام کٹھن ہے رات کڑی ہے

    آؤ کہ یہ آنے کی گھڑی ہے

    وہ ہے اپنے حسن میں یکتا

    دیکھ کہاں تقدیر لڑی ہے

    میں تم کو ہی سوچ رہا تھا

    آؤ تمہاری عمر بڑی ہے

    کاش کشادہ دل بھی رکھتا

    جس گھر کی دہلیز بڑی ہے

    پھر بچھڑے دو چاہنے والے

    پھر ڈھولک پر تھاپ پڑی ہے

    وہ پہنچا امدادی بن کر

    جب جب ہم پر بپھر پڑی ہے

    شہر میں ہے اک ایسی ہستی

    جس کو مری تکلیف بڑی ہے

    ہنس لے رہبرؔ وہ آئے ہیں

    رونے کو تو عمر پڑی ہے

    RECITATIONS

    راجندر ناتھ رہبر

    راجندر ناتھ رہبر,

    راجندر ناتھ رہبر

    شام کٹھن ہے رات کڑی ہے راجندر ناتھ رہبر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY