شعر کی خامی

جگر مراد آبادی

شعر کی خامی

جگر مراد آبادی

MORE BY جگر مراد آبادی

    جگر مرادآبادی کے کسی شعر کی تعریف کرتے ہوئے کسی منچلے نے ان سے کہا:

    ’’حضرت ! اس غزل کے فلاں شعر کو میں نے لڑکیوں کے ایک ہجوم میں پڑھا اور پٹنے سے بال بال بچا۔‘‘

    جگر ؔ صاحب نے ہنستے ہوئے کہا:

    ’’عزیزم! اس شعر میں ضرور کوئی خامی ہوگی ورنہ آپ ضرور پٹتے۔‘‘

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites