ایک خواہش

بشر نواز

ایک خواہش

بشر نواز

MORE BYبشر نواز

    اب کی بار ملو جب مجھ سے

    پہلی اور بس آخری بار

    ہنس کر ملنا

    پیار بھری نظروں سے تکنا

    ایسے ملنا

    جیسے ازل سے

    میرے لیے تم سرگرداں تھے

    بحر تھا میں تم موج رواں تھے

    پہلی اور بس آخری بار

    ایسے ملنا

    جیسے تم خود مجھ پہ فدا ہو

    جیسے مجسم مہر وفا ہو

    جیسے بت ہو تم نہ خدا ہو

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    ایک خواہش نعمان شوق

    Tagged Under

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY