میں اور شہر

منیر نیازی

میں اور شہر

منیر نیازی

MORE BY منیر نیازی

    سڑکوں پہ بے شمار گل خوں پڑے ہوئے

    پیڑوں کی ڈالیوں سے تماشے جھڑے ہوئے

    کوٹھوں کی ممٹیوں پہ حسیں بت کھڑے ہوئے

    سنسان ہیں مکان کہیں در کھلا نہیں

    کمرے سجے ہوئے ہیں مگر راستہ نہیں

    ویراں ہے پورا شہر کوئی دیکھتا نہیں

    آواز دے رہا ہوں کوئی بولتا نہیں

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    میں اور شہر نعمان شوق

    مآخذ:

    • Book: kulliyat-e-muniir niyaazii (Pg. 134)
    • Author: faarooq argalii
    • مطبع: farid book depot (2004)
    • اشاعت: 2004

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites