bambai ki bazm araiyan

रिफ़अत सरोश

नवरंग किताब घर, दिल्ली
1986 | अन्य

पुस्तक: परिचय

परिचय

رفعت سروش ترقی پسند تحریک کے دور کے شاعر ہیں ۔2 جنوری 1926ء کو ضلع بجنور کے نگینہ نامی مقام میں پیدا ہوئے۔وہ ایک حساس ذہن کے مالک تھے ، ترقی پسند تحریک کے زمانے میں کسانوں اور مزدوروں کی تحریکوں نے ان کو متاثر کیااور وہ تمام اثرات ان کی تخلیقی سوچ پر حاوی رہے۔ اپنی ادبی زندگی کے آغاز میں سجاد ظہیر‘ سردار جعفری‘ کیفی اعظمی‘اختر الایمان‘ باقر مہدی‘ ساحر لدھیانوی‘ مجروح سلطانپوری‘ رضیہ سجاد ظہیر اور عصمت چغتائی کے ساتھ ترقی پسند انجمن کی سرگرمیوں میں حصہ لیا اور بہت جلد ترقی پسند مصنفین کی صف اول میں شامل ہو گئے۔ انھوں نے اسی کی ساتھ اردو ادب میں کئی نئے تجربے کیے۔ انھوں نے آل انڈیا ریڈیو کی اردو مجلس میں جب ملازمت اختیار کی تو کسی کو یہ اندازہ نہیں تھا کہ وہ اردو مجلس سے نشر کی جانے والی تخلیقات کو اتنا بلند مرتبہ عطا کر دیں گے۔ انھوں نے ریڈیو میں منظوم ڈراموں کی ابتدا کی جس میں وہ بڑی حد تک کامیاب رہے۔ اردو ادب کو انہوں نے87 کتابیں دی ہیں ، جن میں شاعری‘افسانہ ،تنقید‘ ڈراما اور تاریخ وغیرہ پر کتب شامل ہیں۔84 سال کی عمر میں 2008 میں ان کا انتقال ہوا۔زیر نظر کتاب بمبئی کی بزم آرائیاں رفعت سروش کی خود نوشت سوانح حیات ہے۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

पूरा देखिए

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम