basheer badr

रज़िया हामिद, रिफ़अत सुलतान

भाोपाल बुक हाउस, भोपाल
1988 | अन्य

पुस्तक: परिचय

परिचय

بشیر بدر کے شعری سرمائے کے مطالعہ سے پتہ چلتا ہے کہ وہ دور جدید کے ان شعراء میں شامل ہیں جن کے ذریعہ اردو غزل نئے نئے تجربات کی منزلوں کو طے کرتے ہوئے اکیسویں صدی کی طرف گامزن ہے اور اس میں فکری موضوعاتی، لفظی، اسلوبیاتی غرض کہ ہر قسم کی تبدیلیاں رونما ہو رہی ہیں۔ ان کی شاعری میں روایت سے رشتہ ملتا ہے ، عصری تقاضوں کا احساس اور نئی تبدیلیوں پر نظر ہے ، انھوں نے روایتی مضامین کو بھی نئے انداز اور نئے مفاہیم سے برتا ہے ، بشیر بدر کا اپنا اسلوب اور آہنگ ہے جو لفظی پیکر تراشی نئی تخلیقی لفظیات کے استعمال، علامتی صورت گری جدید نادر تشبیہات اور استعارات سے مل کر بنتا ہے ۔بشیر بدر کا پہلا شعری مجموعہ "اکائی" ہے جس پر اردو اکیڈمی لکھنؤ کی طرف سے ایوارڈ بھی ملا ۔ دوسرا شعری مجموعہ " امیج " ہے جس پر بھی ان کو اردو اکیڈمی لکھنؤ نے ایوارڈ سے نوازہ ،حکومت ہند کی جانب سے ان کی شعری خدمات کے عوض پدم شری ایوارڈ سے بھی نوازا گیا ہے ۔زیر نظر کتاب میں بشیر بدر کی شخصیت اور فن کو محور بنا کر بہت سارے مضامین جمع کئے گئے ہیں۔ جن میں بشیر بدر کی شخصیت اور فن کو اجاگر کیا گیا ہے۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम