adab aur inqilab

अख़्तर हुसैन रायपुरी

इदारा-ए-इशाअत-ए-उर्दू, हैदराबाद
1943 | अन्य

पुस्तक: परिचय

परिचय

تاریخی اعتبار سے اختر حسین رائے پوری ترقی پسند ادب کے علمبرداروں کا مرتبہ رکھتے ہیں۔ان کے تنقیدی مضامین کا مجموعہ "ادب اور زندگی " جو پہلے ہی منظر عام آکر داد و تحسین حاصل کر چکا ہے۔جس میں ادب اور زندگی ، ادبی ترقی پسندی کا مفہوم ، سویت روس کا ادب ، بنگال کا باغی شاعر ،نذر الاسلام ،اردو شاعری میں عورت کا تخیل،اردو زبان کا مستقبل ،جنگ اور ادب وغیرہ شامل ہیں۔ ان تمام مضامین کو زیر نظر کتاب"ادب اور انقلاب" میں دیگر تنقیدی مضامین کے ساتھ پھر سے شامل کیا گیا ہے۔ یہ مضامین مصنف کے وسیع مطالعہ اور عمیق فکر کے شاہد ہیں۔ اس کتاب کو اس بنیاد پر بھی خاص اہمیت حاصل ہے کہ اس نے برصغیر میں ترقی پسند ادب کی تحریک کا نکتہ آغاز فراہم کیاتھا۔ادب اور زندگی، ادب اور انقلاب کے گہرے تعلق کو بتاتی یہ کتاب قارئین کے لیے اہمیت کی حامل ہے۔جس کے مطالعے سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ ہمارا ادب زندگی سے اپنے آپ کو وابستہ کرے گا اور زندگی کے ارتقا کا علم بردار بھی ہوگا۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

पूरा देखिए

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम