अाैराद-ए-फ़तहिय्या

मीर सयय्द अली हमदनी

मुंशी नवल किशोर, लखनऊ
1913 | अन्य

पुस्तक: परिचय

परिचय

"اوراد فتحیہ"میر سیدعلی ہمدانی کی تصنیف ہے یہ ایک ایرانی صوفی بزرگ تھےجوسلسلہ کبرویہ سے منسلک تھے،یہ کتاب اللہ تعالٰی کی وحدانیت اور صفات کے بارے میں ہے،اوراد فتحیہ قرآن کریم اوراحادیث نبویہ کا نچوڑ ہے، اوراد فتحیہ میں میر سید علی ہمدانی نے تقریبا چودہ سو اولیاء کرام کی صحبت میں بیٹھ کر ان کے بتائے ہوئے وظائف جمع کئے ہیں۔اس کتاب کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ میر سید علی نے یہ نسخہ کیمیاء لکھ کر دربار نبیﷺ میں پیش کیا،تاکہ منظوری کے بعد اس کو عوا م کی نظر کریں-لکھا گیا ہے کہ اس کے بعد حضورسرور ﷺ جلوہ گر ہوئے اور فرمایا "خذ ھٰذہ الفتحیہ" چنانچہ تب سے آج تک اکثر مساجد میں صبح کی نماز کے بعد لوگ اجتماعی صورت میں بالجہر اوراد فتحیہ پڑھ کر اپنی روح کو ان توحیدی کلمات کے ذکر سے تازہ کرتے ہیں،اس کتاب کے بہت سے تراجم اور شرحیں لکھی جا چکی ہیں- جن کے پڑھنے سے اس کتاب کی قدر و منزلت ظاہر ہوتی ہے۔

.....और पढ़िए

लेखक की अन्य पुस्तकें

पूरा देखिए

लोकप्रिय और ट्रेंडिंग

पूरा देखिए

पुस्तकों की तलाश निम्नलिखित के अनुसार

पुस्तकें विषयानुसार

शायरी की पुस्तकें

पत्रिकाएँ

पुस्तक सूची

लेखकों की सूची

विश्वविद्यालय उर्दू पाठ्यक्रम