Author : Mahir Aarwi

Publisher : Halqa-e-Ahbab, Arrah

Year of Publication : 1980

Language : Urdu

Categories : History

Sub Categories : Indian

Pages : 128

Contributor : Khanqa Munemia Qamaria, Patna

ara jo ek shahr hai

About The Book

کچھ سرزمیں ایسی ہوتی ہیں جن کی مٹی بہت ہی زیادہ زرخیز ہوتی ہے اور اس پر جو بھی فصل اگائی جائے لہلہا اٹھتی ہے۔ ایسی ہی ایک سرزمین آرا شہر ہے جہاں بہت سے جیالے پیدا کئے۔ رام چندر اور لکشمن جی کو جب وشوامتر جیسے مہارشی سے فن سپہ گری سیکھنے کا موقعہ ملا تو وہ اسی سرزمین پر آکر سیکھا۔ پانڈوں نے بھی اس سرزمین پر اپنی صحرانوردی کے دوران آکر حق مہمان نوازی کا ثبوت دیا۔ 1857 کی جنگ آزادی کے سرفروش بابو کنور سنگھ جگدیش پوری نے بھی سرفروشی کی تمنا کی خراج عقیدت وصول کی۔ رام چرت مانس کے مصنف تلسی داس کا وطن بھی اسی زمین کو کہا جاتا ہے اور ان کی ہی دعا سے یہاں کا شیو مندر کے دروازے کا رخ پشچم کی جانب ہو گیا۔ فورٹ ولیم کے کھڑی بولی کو روپ دینے والے پنڈت سدل مصر، ایشور چندر ودیا ساگر، صحافی ایشوری پرشاد، بھی اسی زمین سے تھے۔ غالب کے شاگرد باقر اور سخن بھی اسی سرزمین سے تھے۔ اس کے علاوہ بھی بہت سے نابغہ روزگار اسی سرزمین کی پیداوار ہیں۔ اس کتاب میں اسی شہر کی تاریخ، عظمت اور اس کا جغرافیہ بیان کیا گیا ہے۔

.....Read more

More From Author

Read the author's other books here.

See More

What Others Read

Curious what other readers are upto? Check this list of favorite Urdu books of Rekhta readers.

See More

Popular And Trending Read

Find out most popular and trending Urdu books right here.

See More

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
Speak Now