سرکس میں نوکری کا آخری دن

شارق کیفی

سرکس میں نوکری کا آخری دن

شارق کیفی

MORE BY شارق کیفی

    لے چبا یہ سر

    جو اب جبڑوں میں ہے تیرے

    اگر تو واقعی میں شیر ہے تو

    شیر بن کر آج دکھلا دے

    مجھے جوکر سمجھتا تھا

    ارے میں تو فقط اس پیٹ کی خاطر

    ہنسانے کے لیے سب کو

    تیرے جبڑوں میں سر دینے سے پہلے بھاگ جاتا تھا

    مجھے اس کھیل کی تنخواہ ملتی تھی

    یہی کردار سرکس میں مرے حصے میں آیا تھا

    مگر میں آج تجھ کو دیکھ لوں گا

    دکھا دوں گا زمانے کو کہ بزدل میں نہیں بزدل تو ہے

    لے چبا

    اب جوکروں سا

    منہ کو پھاڑے کیوں کھڑا ہے

    RECITATIONS

    شارق کیفی

    شارق کیفی

    شارق کیفی

    سرکس میں نوکری کا آخری دن شارق کیفی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY