محبت ہو گئی تم سے

زبیر علی تابش

محبت ہو گئی تم سے

زبیر علی تابش

MORE BYزبیر علی تابش

    تمہیں اک بات کہنی تھی

    اجازت ہو تو کہہ دوں میں

    یہ بھیگا بھیگا سا موسم

    یہ تتلی پھول اور شبنم

    چمکتے چاند کی باتیں

    یہ بوندیں اور برساتیں

    یہ کالی رات کا آنچل

    ہوا میں ناچتے بادل

    دھڑکتے موسموں کا دل

    مہکتی خوشبوؤں کا دل

    یہ سب جتنے نظارے ہیں

    کہو کس کے اشارے ہیں

    سبھی باتیں سنی تم نے

    پھر آنکھیں پھیر لیں تم نے

    میں تب جا کر کہیں سمجھا

    کہ تم نے کچھ نہیں سمجھا

    میں قصہ مختصر کر کے

    ذرا نیچی نظر کر کے

    یہ کہتا ہوں ابھی تم سے

    محبت ہو گئی تم سے

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY