آسماں ساحل سمندر اور میں

عذرا پروین

آسماں ساحل سمندر اور میں

عذرا پروین

MORE BYعذرا پروین

    آسماں ساحل سمندر اور میں

    کھلتا پھر یادوں کا دفتر اور میں

    چار سمتیں آئینہ سی ہر طرف

    تم کو کھو دینے کا منظر اور میں

    میرا اجلا پن نئے انداز میں

    تیری بخشش میلی چادر اور میں

    ایک مورت میں تجربے نت نئے

    کتنے بے کل میرا آذر اور میں

    کھلتے ہیں اسرار عجب آلام میں

    بند ہوتا وہ ہر اک در اور میں

    رات اک تاریک پنجرا یاس کا

    پھڑپھڑاتا ایک پیکر اور میں

    RECITATIONS

    عذرا نقوی

    عذرا نقوی,

    عذرا نقوی

    Asmaan sahil samundar aur mein عذرا نقوی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے