بے کیف جوانی ہے بے درد زمانہ ہے (ردیف .. ')

سرور عالم راز

بے کیف جوانی ہے بے درد زمانہ ہے (ردیف .. ')

سرور عالم راز

MORE BYسرور عالم راز

    بے کیف جوانی ہے بے درد زمانہ ہے

    ناکام محبت کا اتنا ہی فسانہ ہے

    ساون کا مہینہ ہے موسم بھی سہانا ہے

    آ جاؤ جو آنا ہے آ جاؤ جو آنا ہے

    اے کاش کوئی کہہ دے اس چشم فسوں گر سے

    نظروں کا چرانا ہی نظروں کا ملانا ہے

    آغاز محبت سے انجام محبت تک

    ''اک آگ کا دریا ہے اور ڈوب کے جانا ہے''

    RECITATIONS

    فہد حسین

    فہد حسین

    فہد حسین

    بے کیف جوانی ہے بے درد زمانہ ہے فہد حسین

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY