ہمیں سلیقہ نہ آیا جہاں میں جینے کا

فارغ بخاری

ہمیں سلیقہ نہ آیا جہاں میں جینے کا

فارغ بخاری

MORE BYفارغ بخاری

    ہمیں سلیقہ نہ آیا جہاں میں جینے کا

    کبھی کیا نہ کوئی کام بھی قرینے کا

    تمہارے ساتھ ہی اس کو بھی ڈوب جانا ہے

    یہ جانتا ہے مسافر ترے سفینے کا

    کچھ اس کا ساتھ نبھانا محال تھا یوں بھی

    ہمارا اپنا تھا انداز ایک جینے کا

    سخاوتوں نے گہرساز کر دیا ہے انہیں

    کوئی صدف نہیں محتاج آبگینے کا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY