حق مجھے باطل آشنا نہ کرے

انعام اللہ خاں یقین

حق مجھے باطل آشنا نہ کرے

انعام اللہ خاں یقین

MORE BYانعام اللہ خاں یقین

    حق مجھے باطل آشنا نہ کرے

    میں بتوں سے پھروں خدا نہ کرے

    دوستی بد بلا ہے اس میں خدا

    کسی دشمن کو مبتلا نہ کرے

    ہے وہ مقتول کافر نعمت

    اپنے قاتل کو جو دعا نہ کرے

    رو مرے کو خدا قیامت تک

    پشت پا سے تری جدا نہ کرے

    ناصحو یہ بھی کچھ نصیحت ہے

    کہ یقیںؔ یار سے وفا نہ کرے

    RECITATIONS

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    حق مجھے باطل آشنا نہ کرے فصیح اکمل

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY