لے کے دل اس شوخ نے اک داغ سینے پر دیا

بیاں احسن اللہ خان

لے کے دل اس شوخ نے اک داغ سینے پر دیا

بیاں احسن اللہ خان

MORE BYبیاں احسن اللہ خان

    لے کے دل اس شوخ نے اک داغ سینے پر دیا

    جو لیا اس کا عوض اس سے مجھے بہتر دیا

    دور تجھ سے ساغر مے پر نظر میں نے جو کی

    کاسہ اپنا چشم نے خوناب دل سے بھر دیا

    جو سلوک اب دل میں آویں کر مجھے تقدیر نے

    دست و بازو باندھ کر تیرے حوالے کر دیا

    دلبروں کے شہر میں بیگانگی اندھیر ہے

    آشنائی ڈھونڈتا پھرتا ہوں میں لے کر دیا

    بعضے ہی اوقات راحت ہم کو دی ہے چرخ نے

    رنج و غم ہی اس ستم گر نے بیاںؔ اکثر دیا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY