نفس نفس پہ مجھے یاد آئے جاتے ہیں

نشور واحدی

نفس نفس پہ مجھے یاد آئے جاتے ہیں

نشور واحدی

MORE BYنشور واحدی

    نفس نفس پہ مجھے یاد آئے جاتے ہیں

    تمام روح تخیل پہ چھائے جاتے ہیں

    ہم ان کا ذوق محبت چھپائے جاتے ہیں

    مگر یہ ابر جو ساون کے آئے جاتے ہیں

    یہی سماں تھا کسی کی وداع آخر کا

    ستارہ ہائے سحر جھلملائے جاتے ہیں

    زمانہ یاد کرے یا صبا کرے خاموش

    ہم اک چراغ محبت جلائے جاتے ہیں

    نشورؔ آپ کے اشعار درد کیا کہنا

    کسی کی بزم محبت میں گائے جاتے ہیں

    مآخذ:

    • کتاب : Sawad-e-manzil (Pg. 108)
    • Author : Nushoor Wahedi
    • مطبع : Maktaba Jamia Ltd, Delhi (2009)
    • اشاعت : 2009

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY