پھول کے لائق فضا رکھنی ہی تھی

عبد اللہ جاوید

پھول کے لائق فضا رکھنی ہی تھی

عبد اللہ جاوید

MORE BYعبد اللہ جاوید

    پھول کے لائق فضا رکھنی ہی تھی

    ڈر ہوا سے تھا ہوا رکھنی ہی تھی

    گو مزاجاً ہم جدا تھے خلق سے

    ساتھ میں خلق خدا رکھنی ہی تھی

    یوں تو دل تھا گھر فقط اللہ کا

    بت جو پالے تھے تو جا رکھنی ہی تھی

    ترک کرنی تھی ہر اک رسم جہاں

    ہاں مگر رسم وفا رکھنی ہی تھی

    صرف کعبے پر نہ تھی حجت تمام

    بعد کعبہ کربلا رکھنی ہی تھی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے