Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

سحر جب بستر راحت سے وہ رشک قمر اٹھا

لالہ کانجی مل صبا

سحر جب بستر راحت سے وہ رشک قمر اٹھا

لالہ کانجی مل صبا

MORE BYلالہ کانجی مل صبا

    سحر جب بستر راحت سے وہ رشک قمر اٹھا

    غلامی اس کی میں خورشید لے تیغ و سپر اٹھا

    ابھی تسکیں ہوئی تھی اک ذرا فریاد و زاری سے

    لگا دل مضطرب ہونے کہ پھر درد جگر اٹھا

    گلے پر میرے خنجر پھیرتا وہ اور بھی لیکن

    ہوئی مجھ سے خطا اتنی کہ میں فریاد کر اٹھا

    نہیں معلوم اے یارو صباؔ کے دل میں کیا آیا

    ابھی جو بیٹھے بیٹھے وہ یکایک آہ کر اٹھا

    مأخذ:

    Noquush (Pg. B-409 E-419)

      • اشاعت: May June 1954
      • ناشر: Nuqoosh Press Lahore
      • سن اشاعت: May June 1954

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے