یہی اچھا ہے جو اس طرح مٹائے کوئی

آل رضا رضا

یہی اچھا ہے جو اس طرح مٹائے کوئی

آل رضا رضا

MORE BYآل رضا رضا

    یہی اچھا ہے جو اس طرح مٹائے کوئی

    آپ بھی پھر مجھے ڈھونڈے تو نہ پائے کوئی

    کوندتی برق نہ دیتی ہو جہاں فرصت دید

    تاب کیا ہے جو وہاں آنکھ اٹھائے کوئی

    بندشیں عشق میں دنیا سے نرالی دیکھیں

    دل تڑپ جائے مگر لب نہ ہلائے کوئی

    مأخذ :
    • کتاب : Jadeed Shora-e-Urdu (Pg. 778)
    • Author : Dr. Abdul Wahid
    • مطبع : Feroz sons Printers Publishers and Stationers

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY