مصنف: تعارف

مدحت الاختر بنیادی طور پر غزل کے شاعر ہیں۔ وہ زندگی کی تلخیوں کو بڑی چابکدستی کے ساتھ الفاظ کا جامہ پہناتے ہیں۔ انہیں زبان و بیان پر غیر معمولی قدرت حاصل ہے مشکل سےمشکل خیال کو اتنی آسانی سے ادا کرجاتے ہیں کہ قاری چونک جاتاہے۔ ان کے کلام میں عصری آگہی بدرجۂ اتم موجود ہے۔

مدحت الاختر شاہد کبیر اور عبدالرحیم کے ساتھ علاقۂ ودربھ کی جدید شاعری کے مثلث کا اساسی ضلع ہیں۔ جدید غزلوں کا اولین انتخاب ’’چاروں اور‘‘ (1968ء) میں شاہد کبیر کے اشتراک سے مرتب اور شائع کیا۔ اس انتخاب نے اردو کے ادبی حلقوں میں بے پناہ مقبولیت حاصل کی۔ جدید شاعری کے لے رجحان سازی کی کاوش ’’چاروں اور‘‘ ان کا زبردست کارنامہ ہے۔ مدحت الاختر کے دو مجموعے شائع ہو چکے ہیں۔ ’’منافقوں میں روزوشب‘‘( 1980ء) میں اور ’’میری گفتگو تجھ سے‘‘ (2004ء) میں منظر عام پر آیا۔ 

مدحت الاختر نے ایم۔ اے (فارسی) 1967ء (گولڈ میڈلسٹ) ایم۔ اے (اردو) 1969ء، پی۔ ایچ۔ ڈی (فارسی) 1979ء میں تعلیم حاصل کی۔

ذریعۂ معاش، ملازمت: استاد شعبۂ اردو فارسی وسنت راؤ گورنمنٹ انسٹی ٹیوٹ آف آرٹس اینڈ سوشل سائنسز (قدیمی مارس کالج) ناگپور(1971-2003)۔

.....مزید پڑھئے

مصنف کی مزید کتابیں

مصنف کی دیگر کتابیں یہاں پڑھئے۔

مزید

قارئین کی پسند

اگر آپ دوسرے قارئین کی دلچسپیوں میں تجسس رکھتے ہیں، تو ریختہ کے قارئین کی پسندیدہ

مزید

مقبول و معروف

مقبول و معروف اور مروج کتابیں یہاں تلاش کریں

مزید

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے