مجھے گلے سے لگا لو بہت اداس ہوں میں

ساحر لدھیانوی

مجھے گلے سے لگا لو بہت اداس ہوں میں

ساحر لدھیانوی

MORE BY ساحر لدھیانوی

    INTERESTING FACT

    سدھا ملہوترہ سے اپنے عشق کی سرمستی کے دنوں میں ساحر نے یہ گیت لکھا جسے خود سدھا ملہوترہ نے گایا ۔

    مجھے گلے سے لگا لو بہت اداس ہوں میں

    غم جہاں سے چھڑا لو بہت اداس ہوں میں

    یہ انتظار کا دکھ اب سہا نہیں جاتا

    تڑپ رہی ہے محبت رہا نہیں جاتا

    تم اپنے پاس بلا لو بہت اداس ہوں میں

    بھٹک چکی ہوں بہت زندگی کی راہوں میں

    مجھے اب آ کے چھپا لو تم اپنی بانہوں میں

    مرا سوال نہ ٹالو بہت اداس ہوں میں

    ہر اک سانس میں ملنے کی پیاس پلتی ہے

    سلگ رہا ہے بدن اور روح جلتی ہے

    بچا سکو تو بچا لو بہت اداس ہوں میں

    مآخذ:

    • کتاب : Kulliyat-e-Sahir Ludhianvi (Pg. 323)
    • Author : SAHIR LUDHIANVI
    • مطبع : Farid Book Depot (Pvt.) Ltd

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY