تم آئے ہو نہ شب انتظار گزری ہے

فیض احمد فیض

تم آئے ہو نہ شب انتظار گزری ہے

فیض احمد فیض

MORE BY فیض احمد فیض

    تم آئے ہو نہ شب انتظار گزری ہے

    تلاش میں ہے سحر بار بار گزری ہے

    جنوں میں جتنی بھی گزری بکار گزری ہے

    اگرچہ دل پہ خرابی ہزار گزری ہے

    ہوئی ہے حضرت ناصح سے گفتگو جس شب

    وہ شب ضرور سر کوئے یار گزری ہے

    وہ بات سارے فسانے میں جس کا ذکر نہ تھا

    وہ بات ان کو بہت نا گوار گزری ہے

    نہ گل کھلے ہیں نہ ان سے ملے نہ مے پی ہے

    عجیب رنگ میں اب کے بہار گزری ہے

    چمن پہ غارت گلچیں سے جانے کیا گزری

    قفس سے آج صبا بے قرار گزری ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    اسد امانت علی

    اسد امانت علی

    حبیب ولی محمد

    حبیب ولی محمد

    مہدی حسن

    مہدی حسن

    رفاقت علی خان

    رفاقت علی خان

    عامر علی خان

    عامر علی خان

    امجد پرویز

    امجد پرویز

    فیض احمد فیض

    فیض احمد فیض

    RECITATIONS

    عامر علی خان

    عامر علی خان

    اقبال بانو

    اقبال بانو

    عامر علی خان

    تم آئے ہو نہ شب انتظار گزری ہے عامر علی خان

    مآخذ:

    • Book: Nuskha Hai Wafa (Pg. 132)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites