آ تجھ کو خیال میں بساؤں

رضا ہمدانی

آ تجھ کو خیال میں بساؤں

رضا ہمدانی

MORE BYرضا ہمدانی

    آ تجھ کو خیال میں بساؤں

    سوئے ہوئے درد کو جگاؤں

    دل پھٹنے لگا ہے یاد محبوب

    آ تجھ کو ہی اب گلے لگاؤں

    جز تیرے نہ سن سکے کوئی بھی

    اس لے میں تجھے میں گنگناؤں

    اے نغمہ طراز جسم موزوں

    مصرع کی طرح تجھے اٹھاؤں

    جو گزرا ہے تیری خلوتوں میں

    کیسے وہ زمانہ بھول جاؤں

    ہو بس میں مرے تو سنگ دل کو

    حالات کا آئینہ دکھاؤں

    مأخذ :
    • کتاب : funoon-volume-21 (Pg. 333)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY