آج دستا ہے حال کچھ کا کچھ

ولی محمد ولی

آج دستا ہے حال کچھ کا کچھ

ولی محمد ولی

MORE BYولی محمد ولی

    آج دستا ہے حال کچھ کا کچھ

    کیوں نہ گزرے خیال کچھ کا کچھ

    دل بے دل کوں آج کرتی ہے

    شوخ چنچل کی چال کچھ کا کچھ

    مجکو لگتا ہے اے پری پیکر

    آج تیرا جمال کچھ کا کچھ

    اثر بادۂ جوانی ہے

    کر گیا ہوں سوال کچھ کا کچھ

    اے ولیؔ دل کوں آج کرتی ہے

    بوئے باغ وصال کچھ کا کچھ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY