آج ہمیں یہ بات سمجھ میں آئی ہے

وصی شاہ

آج ہمیں یہ بات سمجھ میں آئی ہے

وصی شاہ

MORE BYوصی شاہ

    آج ہمیں یہ بات سمجھ میں آئی ہے

    تم موسم ہو اور موسم ہرجائی ہے

    تو نے کیسے موڑ پہ چھوڑ دیا مجھ کو

    دل کی بات چھپاؤں تو رسوائی ہے

    تیرے بعد بچا ہے کیا جیون میں مرے

    میں ہوں بھیگی شام ہے اور تنہائی ہے

    آج مری آنکھوں میں ساون اترے گا

    آج بہت دن بعد تری یاد آئی ہے

    آج کی رات بہت بھاری ہے دونوں پر

    آج مجھے وہ خط لوٹانے آئی ہے

    جانے میں کیا سوچ کے چپ ہوں گم صم ہوں

    جانے کیا وہ سوچ کے واپس آئی ہے

    یہ مہمان نوازی ہے یا اور ہے کچھ

    میرے لیے وہ چائے بنا کے لائی ہے

    آج ہمیں یہ بات سمجھ میں آئی ہے

    تم موسم ہو اور موسم ہرجائی ہے

    RECITATIONS

    وصی شاہ

    وصی شاہ,

    وصی شاہ

    Aaj humein ye baat samjh mein aai hai وصی شاہ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے