عالم تری نگہ سے ہے سرشار دیکھنا

ماہ لقا چندا

عالم تری نگہ سے ہے سرشار دیکھنا

ماہ لقا چندا

MORE BYماہ لقا چندا

    عالم تری نگہ سے ہے سرشار دیکھنا

    میری طرف بھی ٹک تو بھلا یار دیکھنا

    ناداں سے ایک عمر رہا مجھ کو ربط عشق

    دانا سے اب پڑا ہے سروکار دیکھنا

    گردش سے تیری چشم کے مدت سے ہوں خراب

    تس پر کرے ہے مجھ سے یہ اقرار دیکھنا

    ناصح عبث کرے ہے منع مجھ کو عشق سے

    آ جائے وہ نظر تو پھر انکار دیکھنا

    چنداؔ کو تم سے چشم یہ ہے یا علی کہ ہو

    خاک نجف کو سرمۂ ابصار دیکھنا

    RECITATIONS

    عذرا نقوی

    عذرا نقوی

    عذرا نقوی

    عالم تری نگہ سے ہے سرشار دیکھنا عذرا نقوی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY