آنکھوں میں بسے ہو تم آنکھوں میں عیاں ہو کر

فرحت کانپوری

آنکھوں میں بسے ہو تم آنکھوں میں عیاں ہو کر

فرحت کانپوری

MORE BYفرحت کانپوری

    آنکھوں میں بسے ہو تم آنکھوں میں عیاں ہو کر

    دل ہی میں نہ رہ جاؤ آنکھوں سے نہاں ہو کر

    ہاں لب پہ بھی آ جاؤ انداز بیاں ہو کر

    آنکھوں میں بھی آ جاؤ اب دل کی زباں ہو کر

    کھل جاؤ کبھی مجھ سے مل جاؤ کبھی مجھ کو

    رہتے ہو مرے دل میں الفت کا گماں ہو کر

    ہے شیخ کا یہ عالم اللہ رے بدمستی

    آنکھوں ہی سے ظاہر ہے آیا ہے جہاں ہو کر

    بدنامی و بربادی انجام محبت ہیں

    دنیا میں رہا فرحتؔ رسوائے جہاں ہو کر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY