ہر صبح آوتا ہے تیری برابری کو

خاں آرزو سراج الدین علی

ہر صبح آوتا ہے تیری برابری کو

خاں آرزو سراج الدین علی

MORE BY خاں آرزو سراج الدین علی

    ہر صبح آوتا ہے تیری برابری کو

    کیا دن لگے ہیں دیکھو خورشید خاوری کو

    دل مارنے کا نسخہ پہونچا ہے عاشقوں تک

    کیا کوئی جانتا ہے اس کیمیا گری کو

    اس تند خو صنم سے ملنے لگا ہوں جب سے

    ہر کوئی جانتا ہے میری دلاوری کو

    اپنی فسوں گری سے اب ہم تو ہار بیٹھے

    باد صبا یہ کہنا اس دل ربا پری کو

    اب خواب میں ہم اس کی صورت کو ہیں ترستے

    اے آرزو ہوا کیا بختوں کی یاوری کو

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    ہر صبح آوتا ہے تیری برابری کو نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY