اب اس جہان برہنہ کا استعارہ ہوا

امیر امام

اب اس جہان برہنہ کا استعارہ ہوا

امیر امام

MORE BYامیر امام

    جو اب جہان برہنہ کا استعارہ ہوا

    میں زندگی ترا اک پیرہن اتارا ہوا

    سیاہ خون ٹپکتا ہے لمحے لمحے سے

    نہ جانے رات پہ شب خوں ہے کس نے مارا ہوا

    جکڑ کے سانسوں میں تشہیر ہو رہی ہے مری

    میں ایک قید سپاہی ہوں جنگ ہارا ہوا

    پھر اس کے بعد وہ آنسو اتر گیا دل میں

    ذرا سی دیر کو آنکھوں میں اک شرارہ ہوا

    خدا کا شکر مری تشنگی پلٹ آئی

    چلی گئی تھی سمندر کا جب اشارہ ہوا

    امیر امام مبارک ہو فتح عشق تمہیں

    یہ درد مال غنیمت ہے سب تمہارا ہوا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    امیر امام

    امیر امام

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY